میرا آرٹسٹ

میرا آرٹسٹ
تحریر محمداظہرحفیظ
میرا خیال یا وھم تھا کہ میں ایک آرٹسٹ دوست انسان ھوں پر آج مجھے احساس ھوا کہ میں تو ایک قاتل ھوں اپنے آرٹسٹ کا۔ اپنے آرٹسٹ دوست کا۔
مجھے اپنی انا محبت اور عشق میں یاد ھی نہیں رھا کہ میرا ایک آرٹسٹ بھی ھے اور میں اس کو اگنور کر گیا ھوں اور وہ ذھنی پریشانی کا شکار ھو رھا ھے میں اس سے نہیں پوچھ سکا وہ کیا پینٹ کر رھا ھے کیا کرنا چاھتا ھے کیا سوچ رھا ھے پینٹنگ کا سائز کیا ھے میڈیم کیا ھے سلکپچر کتنے بنانے ھیں زمین پینٹ کرنی ھے یا آسمان کیلی گرافی کہاں کہاں کرنی ھے فوٹو کہاں لگانے ھیں پرنٹ کتنے بڑھے بڑھے بنانے ھیں ایبسٹریکٹ پینٹ کرنا ھے یا ریلسٹک کچھ بھی تو نہیں پوچھا حالانکہ مجھے سب پتہ تھا پر میں نا انصافی کر گیا اپنے ساتھ اور اپنا آرٹسٹ اپنے ھاتھوں ھلاک کردیا ۔
ظلم ھوگیا مجھے اچھا لگتا تھا پیسٹل کلر سے پھول بنانا اکریلک کلر سے ایبسٹریکٹ بنانا آئل کلر سے پینٹنگ بنانا بہت سے رنگ برش کینوس خرید لایا تھا پر اس کو پینٹ کون کرے گا میرا آرٹسٹ تو میں نے خود قتل کر دیا ایک جہاں ختم ھوگیا اب کون بنائے گا میرا پورٹریٹ میری کتاب کی السٹریشنز کون بنائے گا میں شاید اپنے آپ کو معاف نہ کر سکوں کیونکہ میں نے اپنے آرٹسٹ کو پنپنے نہیں دیا اور قتل کر دیا خود لگا رھا عکاسی میں تصویریں بناتا رھا گنگناتا رھا تتلیوں کے پیچھے بھاگتا رھا پر میرے آرٹسٹ کا دم گھٹتا رھا وہ اکیلا تھا دنیا کے اس جمبھیلے میں کوئی نہ تھا آگے پیچھے اور وہ مجھے سوچتا رھا روتا رھا اسے کون چپ کراتا میں تو تصویریں بنا رھا تھا سوچتا ھوں اپنے کندھے لگ کر آج خوب روں دل کو ھلکا کروں وعدہ کروں اپنے آپ سے اب تصویریں نہیں پینٹنگ بناوں گا اپنے آرٹسٹ کو مرنے سے پہلے زندہ کرکے امر کرکے جاوں گا اسکا ایک نام ھوگا اب دنیا میں کوئی میرے نام کا فوٹوگرافر نہیں ھوگا بس میرا ھمزاد آرٹسٹ ھوگا ھم دونوں میں اور میرا آرٹسٹ جھیل کنارے بیٹھ پینٹنگ کریں گے پھولوں تتلیوں کشتیوں صحراؤں سمندروں پہاڑوں کی حسیناوں کی اور تعمیر کریں گے اپنے خواب دن کے بھی اور رات کے بھی تعلق کو بڑھائیں گے بیس منٹ سے بھی اگے زندگی بھر کیلئے بس مجھے یہ قتل ایک دفعہ معاف کر دو اے دنیا کے منصفوں پھر دیکھو کیا دنیا بناتا ھوں کیا دنیا دکھاتا ھوں تصویریں تو خیالی نہیں ھوتیں پر پینٹنگز تو ھو سکتی ھیں میں ابھی شروع کروں گا رات کے اس پہر بناوں گا اپنا پہلا خواب اور پہلا پیار کینوس پر جب ھوجائے گا مکمل تو سب دیکھنا میں اور میرا آرٹسٹ

Prev مجرم تے قانون
Next 26 جولائی 2018

Leave a comment

You can enable/disable right clicking from Theme Options and customize this message too.