ساتویں تصویری نمائش

ساتویں تصویری نمائش
تحریر محمد اظہر حفیظ
تصویریں بنانا اور انکو عوام کے سامنے پیش کرنا میرا شوق ھے ۔ 
لوگوں کے مختلف رویے سامنے آتے ھیں ان کو برداشت کرنا ھی نمائش کرنا ھے ۔ نمائش کی تیاری میں تقریبا ایک سال سے کر رھا تھا تصاویر کی سلیکشن، مختلف ممالک کی سیر، مختلف گیلریز سے رابطے اور انکی تکلیف دہ باتیں سننا بھی آپکو آرٹسٹ بننے میں مدد دیتا ھے۔ کام شیئر کریں اور مہینوں انکے جواب کا انتظار کریں پھر نئی گیلری سے رابطہ کریں انکو یقین دلائیں کہ فوٹوگرافی بھی ایک آرٹ ھے۔ پر ماننے کو کون تیار ھے۔ لیکن میری زندگی کے تیس سال اسی جدوجہد میں گزر گئے۔ اور میں نے بھی گزار دیئے۔ کچھ گیلریز کو کرایہ کی مد میں پیسے چاھیئے تھے اور کچھ کو خود پرنٹ بنانے کا شوق تھا۔ میں سب سے ملتا رھا ۔ علم اور برداشت میں اضافہ ھوتا رھا۔ پھر سوچا اگر پیسے ھی خرچنے ھیں تو پاکستان کی سب سے بڑی گیلری میں نمائش کی جائے اور میں نے اپنی ایک سٹوڈنٹ ثوبیہ رحمن سے رابطہ کیا بیٹا شو کرنا ھے نیشنل آرٹ گیلری میں۔ سر ضرور آپ ھماری ڈائریکٹر میڈم آمنہ پٹوڈی صاحبہ سے رابطہ کریں آرٹ لور ھیں ۔ اور کسی سفارش کی بھی ضرورت نہیں جی بہتر۔ ان سے فون پر بات ھوئی وقت طے ھوا اور میں اپنی تصویروں کے چھوٹے پرنٹ لیکر حاضر ھوا انھوں نے تصویریں دیکھیں اور کہا ٹھیک ھے ھم نمائش کرتے ھیں اور پندرہ دن کیلئے آپ کو گیلری دیتے ھیں ۔ شکریہ میڈیم اس کے چارجز کیا ھونگے ۔ کوئی چارجز نہیں ھم خوشی کے ساتھ آپکے کام کی نمائش کریں گے ۔ دوسری ملاقات تھی پہلی آرٹسٹ کنونش 2018 پر ھوئی تھی واقعی آرٹسٹ دوست ڈائریکٹر ھیں شکریہ پی این سی اے۔
آب تاریخ طے ھوگئی 23مارچ 2019 ۔
پرنٹ فریم سب کچھ ھوچکا تھا ۔ وہ میں دسمبر میں تیاری کرچکا تھا پرنٹس کیلئے حاجی اکرام صاحب اکرام ڈیجیٹل لیب لاھور والوں نے خصوصی شفقت کی اور فریمز تو ھمیشہ سے ھی آرٹ فلو لوک ورثہ سے ھورھے ھیں یہ چھٹی نمائش تھی انکے ساتھ عبدالغفار بھائی اور عبدالرزاق بھائی کو خصوصی شکریہ۔ 
اب بات شروع ھوئی دعوتی کارڈ، سائن بورڈ،کیٹلاگ،سٹینڈی، ای انوائیٹ کی تو ضمن ارمغان حاضر میری بہترین دوست بھائی اس نے یہ سب کام بہت ذمہ داری سے کئے اور ویڈیو کی ساری ذمہ داری ناصر نعیم بھائی نے لی اور بہت احسن طریقے سے نبھائی انکا بھی شکریہ۔ ارشد کھوکھر اور صبا اعوان نے بہت ذمہ داری سے ویڈیو اور فوٹوگرافی کی ذمہ داری نبھائی خصوصی شکریہ۔
دعوت عام تھی کچھ نے وعدے کئے، کچھ نے بہانے کئے اور باقی سب آگئے الحمدللہ ۔ سردار محمود صادق میرے بڑے بھائی میرے دوست جنہوں نے پچھلے پچیس سال سے میرے خوشی کو خوشی اور غم کو اپنا غم سمجھا اس تقریب کے مہمان خصوصی تھے اور جمال شاہ جی جنھوں نے 1991 میں میری پہلی نمائش ھنر کدہ میں منعقد کی اور میری ساتویں نمائش بھی انھی کی گیلری نیشنل آرٹ گیلری میں ھوئی وہ اب یہاں ڈائریکٹر جنرل کے عہدے پر فائز ھیں اور مکمل طور پر ساتھ رھے۔ سب دوستوں نے شرکت کی کچھ دوست خاص طور پر لاھور سے آئے تھے اور کچھ بائیکرز دوست راولپنڈی اسلام آباد سے آئے تھے۔بی این ڈبلیو کولیکشن اور کیپیٹل سٹیل انڈسٹریز کے تعاون سے زندگی کی پہلی کیٹلاگ چھاپنے میں کامیاب ھوسکا حیدر رفیق بھائی اور وقاص بھائی دونوں کا شکریہ۔
کچھ لوگ راستہ پوچھنے کیلئے فون کر رھے تھے اور کچھ راستہ بھولنے کیلئے فون۔ کچھ پوچھ رھے تھے نمائش پر آنے والوں کو سرٹیفیکیٹ دیں گے اور کچھ کا سوال تھا کیا پندرہ دن روزانہ چائے کا انتظام ھوگا۔ کچھ کہہ رھے تھے راستے بند ھیں اور کچھ تو کچھ بھی نہیں کہہ پائے۔ نائیکون کمپنی سے عدنان نذیر بھائی کا فون آیا شکریہ باقی تئیس مارچ کی تقریب میں مصروف تھے۔ ایک دو تو جہاز اڑا رھے تھے۔ انتظار کسی کا نہیں کیا لیکن پھر بھی بے شمار لوگ آئے نیشنل کالج آف آرٹس راولپنڈی کے ایڈمنسٹریٹر اعظم جمال صاحب ، استاد عقیل سولنگی صاحب ،استاد سجاد اکرم صاحب،استاد نعمیرہ جاوید بٹ صاحبہ اور طلبا نے خصوصی طور پر شرکت کی۔ میڈیا کے دوستوں نے تو کمال دوستی نبھائی سب چینیل اور اخبار تشریف لائے۔ ان سب کا شکریہ پاکستان ٹیلیویژن کارپوریشن میرا اپنا ادارہ بھی اس دفعہ بہت شفقت سے پیش آیا جس کی بے انتہاء خوش ھے سوشل میڈیا اور سب چینلز پر خصوصی کوریج دی۔ سب دوستوں کا شکریہ۔ پی این سی اے سے مریم،صبا،ارم،اشفاق بھائی سب نے بھر پور تعاون کیا شکریہ، پرفائل پرنٹرز سے زبیر بھائی نے خصوصی شفقت کی شکریہ، ناصر گل صاحب نے لکھنے والے سب کام ذمہ داری سے کیئے۔ 
میری اپنی فیملی نے بھر پور ساتھ دیا میری بہن سمندری سے تشریف لائیں انکا بھی شکریہ میرے بھائی طارق حفیظ ھر گھڑی ساتھ تھے۔ بیٹی علیزے،فاطمہ، اور بھانجے فہد نے بہت بھاگ دوڑ کی اور مجھے ھر طرح کی سہولت پہنچائی شکریہ بیگم سعدیہ اظہر تو 20 سال سے ساتھ ساتھ ھیں انھوں نے چائے اسپانسر کی۔ تنویر بھائی امی اور فیملی کا شکریہ،عمران افضل فیملی اور امی کا شکریہ۔ طارق چوھدری ماڈرن بیکرز اور عبید صاحب راجہ عثمان فوڈز نے اچھی چائے کا انتظام کرنے میں مدد کی۔استاد احسان علی قریشی، استاد الیاس صاحب کی خصوصی شرکت مجھ پر احسان ھے۔ کچھ دوستوں نے اگلی نمائش میں آنے کا وعدہ کیا اور کچھ نے اپنے شہر میں نمائش کی صورت میں یقینی شرکت کا وعدہ کیا۔ جنہوں نے آنا تھا سب آئے بقول دوستوں کے اتنی بڑی عوام اور میڈیا کی شرکت بہت سالوں بعد دیکھنے کو ملی۔ میلہ لگا ھوا تھا اور لگا ھوا ھے، شکر الحمدللہ ایک شاندار کامیاب شو کیلئے۔ سب کا شکریہ ۔ میرا حوصلہ بننے اور بڑھانے کا شکریہ۔ آپکا سب کا تابعدار فوٹوگرافر محمد اظہر حفیظ

Prev نمائش 
Next پہلے جیسا

Comments are closed.